Tickerاخبارسائنس و ٹیکنالوجی

کورونا وائرس جلد پر کتنی دیر تک زندہ رہ سکتا ہے؟ تحقیق کے نتائج سامنے آ گئے

ٹوکیو: عالمی وبا کورونا وائرس کے حوالے سے متعدد تحقیقات سامنے آئی تھیں کہ وائرس کس سطح پر کتنی دیر تک زندہ رہ سکتا ہے لیکن ان تحقیقات میں یہ بات سامنے نہیں آئی تھی کہ وائرس انسانی جِلد پر کتنی دیر تک رہ سکتا ہے۔

حال ہی میں سائنسدانوں کی جانب سے لیبارٹری میں تجربہ کیا گیا کہ کورونا وائرس جِلد پر کتنی دیر تک رہ سکتا ہے۔ جاپان کی کیوٹو پریفیکچورل یونیورسٹی آف میڈیسن کی ایک ٹیم نے وبا سے بچنے کے لیے ہاتھ دھونے کی اہمیت کو اجاگر کرنے کے لیے ایک تحقیق کی ہے۔ جرنل آف کلینیکل انفیکشیئس ڈیزیز میں شائع ہونے والی تحقیق میں سائنسدانوں نے جلد پر کورونا وائرس کے نمونوں کے ساتھ ساتھ انفلوئنزا وائرس کے نمونوں کا بھی تجربہ کیا۔ تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ کورونا وائرس جلد پر 9 گھنٹے جب کہ انفلوئنزا وائرس جلد پر تقریباً پونے دو گھنٹے یعنی 1.8 گھنٹے تک زندہ رہ سکتا ہے۔

دوسری جانب سائنسدانوں نے بتایا کہ جب کورونا وئرس کو اپر ریسپائریٹری ٹریک سے حاصل کیے جانے والے بلغم کے ساتھ ملا کر جانچا گیا تو یہ 11 گھنٹوں تک زندہ رہا۔ سائنسدانوں نے مزید بتایا کہ دونوں وائرس 80 فیصد الکوحل والے ہینڈ سینیٹائزر لگانے کے بعد 15 سیکنڈز کے اندر اندر ہی ختم ہوگئے۔ انہوں نے بتایا کہ اس تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ عالمی وبا کورونا وائرس سے بچنے کے لیے ہاتھ کی صفائی بے حد ضروری ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button